BBC navigation

شامی اپوزیشن کا عالمی مذاکرات کا بائیکاٹ

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 23 فروری 2013 ,‭ 12:56 GMT 17:56 PST

شام کی حزب اختلاف روس کی طرف سے بشار الاسد حکومت کو سکڈ میزائلوں کی فراہمی پر سخت اعتراضات ہیں

شام کی اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد سیرین نیشنل کانگریس نے شام میں امن کے لیے ہونے والی تمام سفارتی مذاکرات میں شرکت سے معذوری ظاہر کر دی ہے۔

شامی اپوزیشن گروہ کا اعتراض ہے کہ بیرونی دنیا شام میں ہونے والے قتل عام کو بند کرانے میں بری طرح ناکام ہوئی ہے۔

سیرین نیشنل کانگریس نے ایک بیان میں کہا ہے کہ وہ آئندہ ماہ روم میں فرینڈز آف سریا گروپ کے زیر اہتمام ہونے والے اجلاس میں شریک نہیں کرے گی۔

سیرین نیشنل کانگریس نے شام کے حوالے سے واشنگٹن اور ماسکو میں ہونے والے مذاکرت میں بھی شرکت سے معذوری ظاہر کی ہے۔

سیرین نیشنل کانگریس نے ایک بیان میں روس کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

شامی اپوزیشن کا کہنا ہے کہ روس صدر بشار الاسد کو اسلحہ کی فراہمی جاری رکھے ہوئے ہے جس سے وہ عام شہریوں کا قتل عام کر رہا ہے۔

سیرین اپوزیشن نے کہا ہے کہ روزانہ عام شہریوں کا قتل عام ہو رہا ہے اور دنیا اس پر خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے۔

مشرق وسطیٰ میں بی بی سی کے نامہ جم میوئر کے مطابق شامی اپوزیشن کی جانب سے سفارتی کوششوں کے بائیکاٹ سے اپوزیشن رہنما معاذ الخطیب کا امن منصوبہ بری طرح ناکام ہو گیا ہے۔

معاذ الخطیب نے تین ہفتے پہلے ملک میں تشدد کے خاتمے کے لیے شامی حکومت کے نمائندوں کے ساتھ مذاکرات پر آمادگی ظاہر کی تھی۔

معاذ الخطیب کی کوششوں کو روس سمیت تمام عالمی طاقتوں کی حمایت حاصل تھی۔

سیرین اپوزیشن روس کی جانب سے صدر بشار الاسد کی حکومت کو سکڈ میزائلوں کی فراہمی پر انتہائی ناراض ہے۔

شامی حکومت نے حال ہی میں حلب میں مزاحمت کارروں کے ٹھکانوں کو سکڈ میزائلوں سے نشانہ بنایا ہے جس سے بہت تباہی پھیلی ہے۔

اپوزیشن کا کہنا ہے کہ حکومت ایک منصوبے کے تحت شام کے سب سے بڑے شہر حلب کو تباہ کر رہی ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔