’انتخابات میں تاخیر فوج کے مفاد میں نہیں‘

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 21 فروری 2013 ,‭ 15:10 GMT 20:10 PST

اگر صوبے میں گورنر راج ختم کرنے کا فیصلہ کیا گیا تو وہ بھی سیاسی ہوگا: آئی ایس پی آر

پاکستان کی فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے سربراہ میجر جنرل عاصم سلیم باجوہ کا کہنا ہے کہ عام انتخابات میں تاخیر کسی طور پر بھی فوج کے مفاد میں نہیں ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ آئین کے تحت فوج حکومتِ وقت کے ماتحت ہے اور فوج کو جو بھی احکامات ملیں گے اُس پر عمل درآمد ہوگا۔

جمعرات کو مقامی میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے میجر جنرل عاصم سلیم باجوہ کا کہنا تھا کہ پاکستانی فوج نے گُزشتہ پانچ سالوں سے جمہوری نظام کی حمایت کی ہے اور اس وقت جبکہ موجودہ جمہوری حکومت اپنی آئینی مدت پوری کرنے جا رہی ہے تو فوج کیونکر اپنی پالیسی تبدیل کرے گی۔

فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے ڈائریکٹر جنرل کا کہنا تھا کہ فوج تمام شدت پسند تنظیموں کے خلاف برسرپیکار ہے۔

ایک سوال کے جواب میں میجر جنرل عاصم سلیم باجوہ کا کہنا تھا کہ بلوچستان میں گورنر راج لگانے کا فیصلہ سیاسی ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ اگر صوبے میں گورنر راج ختم کرنے کا فیصلہ کیا گیا تو وہ بھی سیاسی ہوگا۔

اُنہوں نے کہا کہ ہزارہ ٹاؤن واقعہ کے بعد فرنٹئیر کور نے انیس نئی چیک پوسٹیں قائم کی ہیں۔

ٹارگٹ آپریشن

ایف سی کی کمانڈ میں کوئٹہ اور دیگر علاقوں میں ٹارگٹ آپریشن جاری ہے جس میں خفیہ ایجنیسوں کے علاوہ پولیس کی مدد بھی حاصل ہے

فوج کے شعبہ تعلقات عامۂ کے سربراہ کا کہنا تھا کہ ایف سی کی کمانڈ میں کوئٹہ اور دیگر علاقوں میں ٹارگٹ آپریشن جاری ہے جس میں خفیہ ایجنیسوں کے علاوہ پولیس کی مدد بھی حاصل ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ انٹر سروسز انٹیلیجنس اپنی حدود میں رہتے ہوئے صوبے میں کارروائیاں کر رہی ہے۔

ہزارہ ٹاؤن واقعہ کے بعد مظاہرین کوئٹہ کو فوج کے حوالے کرنے کا مطالبہ کر رہے تھے۔

سیکریٹری دفاع لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ یاسین ملک نے سانحہ ہزارہ ٹاؤن سے متعلق ازخود نوٹس کی سماعت کے دوران سپریم کورٹ کو بتایا تھا کہ آئی ایس آئی نے علاقے میں ایک سو تیس آپریشن کیے جس سے اُن کے بقول علاقے میں شدت پسندی کے واقعات کو روکنے میں مدد ملی ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔