BBC navigation

لاہور: سکول میں آتشزدگی سے اکیس بچے جھلس گئے

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 21 فروری 2013 ,‭ 06:30 GMT 11:30 PST

سردیوں میں گیس کی وجہ سے اگ لگنے اور دم گھٹنے کے واقعات میں اضافہ ہو جاتا ہے

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور میں شاہدرہ کے علاقے میں واقع ایک سکول میں آگ لگنے کے نتیجے میں اکیس بچے اور ایک استاد جھلس گئے ہیں۔

لاہور سے بی بی سی کی نامہ نگار شمائلہ جعفری نے بتایا کہ رات کو کلاس روم کے اندر ہیٹر کھلا رہ گیا تھا جس کی آگ بجھنے کے بعد کمرے میں گیس بھر گئی اور جب صبح بچوں کی آمد کے بعد آگ جلانے کے لیے ماچس جلائی گئی تو اس سے آگ بھڑک اٹھی۔

لاہور کے ریسکیو زرائع نے بی بی سی کو بتایا کہ اس واقعے کے نتیجے میں اکیس بچے جھلس کر زخمی ہوئے جنہیں میو ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں واحد سرکاری برن سینٹر ہے جہاں آگ سے جھلسنے والے افراد کا علاج کیا جاتا ہے۔

میو ہسپتال کے ایک ڈاکٹر نے بی بی سی کو بتایا کہ زخمی ہونے والے بچوں میں کچھ بچے پچاس سے ساٹھ فیصد تک جلے ہیں جن کی حالت نازک ہے۔

یہ واقعہ شاہدرہ کے ایک پرائیوٹ سکول میں پیش آیا جو ایک سکولوں کے گروپ کا حصہ ہے۔

بچوں کے علاوہ اس واقعے میں ایک استاد بھی جھلس گئیں۔

یاد رہے کہ پاکستان میں سردی کے مہینوں میں گیس کی وجہ سے دم گھٹنے یا آگ لگنے کے واقعات میں اضافہ ہوجاتا ہے جس کی وجہ ماہرین عموماً لاپرواہی کو ٹھہراتے ہیں۔

گیس کے پریشر میں کمی بیشی بھی ایک وجہ ہے جب گیس بند ہونے کی وجہ سے آگ بجھ جاتی ہے مگر جب گیس دوبارہ آتی ہے تو اس کے نتیجے میں ناخوشگوار واقعات پیش آتے ہیں۔

اسی لیے اکثر ہدایت کی جاتی ہے کہ غیر موجودگی میں گیس بند کر دی جائے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔