A Guide to Urdu - 10 facts about the Urdu language in Urdu

Fotolia © Naiyyer
English version

Download buttonDownload mp3 - right click and choose 'save target as'

Open/close
اردو کہاں بولی جاتی ہے؟

 

اردو ایک زندہ زبان ہے اور ایک اندازے کے مطابق دنیا بھر میں لگ بھگ دس کروڑ لوگ اسی زبان میں اظہار خیال کرتے ہیں۔ پاکستان میں انگریزی کے علاوہ اردو سرکاری زبان بھی ہے۔ بھارت، بنگلہ دیش، نیپال، مشرق وسطی اور دنیا کے کئی اور ملکوں میں جہاں پاکستانی رہتے ہیں، اردو بولی اور سمجھی جاتی ہے۔

بھارت میں اردو ان علاقوں میں بولی جاتی ہے جہاں مسلمان بڑی تعداد میں رہتے ہیں اور ان شہروں میں بھی جو کسی دور میں مسلمان حکمرانوں کی طاقت کا مرکز رہے ہیں۔ ان علاقوں میں اتر پردیش، دلی، کشمیر، بھوپال اور حیدرآباد شامل ہیں۔ بھارت کے بعض اسکولوں میں بھی اردو پہلی زبان کے طور پر پڑھائی جاتی ہے اور ان کا نصاب اور امتحانات بھی اسی زبان میں ہوتے ہیں۔

صرف برطانیہ میں اردو بولنے والوں کی تعداد چار لاکھ کے قریب ہے۔

Open/close
کچھ اردو الفاظ جو آپ جانتے ہوں گے۔

 

انگریزی زبان کے کئی الفاظ عام اردو بول چال میں استعمال کیے جاتے ہیں۔ مثلاً
سائنس science
گلاس glass
کرپٹ corrupt
مائنڈ mind
اکورٹ court
جیل jail
فائل file
کاپی copy
فوٹو photo
لائبریری library
کار car
بس bus
ریلوے railway
ائرپورٹ airport

اسی طرح اردو نے کچھ الفاظ انگریزی کو عطا کیے ہیں۔ مثلاً
خوشی cushy
پکّا pukka
کمر بند cummerbund
چٹنی chutney
گرم مصالح garam masala
جنگل jungle
ٹھگ thug
برآمدہ verandah

Open/close
اردو سیکھنی کتنی مشکل ہے؟

 

اردو گرامر اور الفاظ اور جملوں کی ساخت بہت منظم ہے لیکن ساتھ ہی ساتھ اس میں کئی مشکلات بھی ہیں۔

اردو زبان میں مصدر پرتکلف اور بلاتکلف صورت میں استعمال ہوتا ہے اور ہر اسم مؤنث یا مذکر صنف کا حامل ہوتا ہے۔ اگر آپ شروع میں چیزوں کو گڈمڈ کردیں تو فکر نہ کریں کیونکہ ایک طالب علم کے طور پر آپ کی غلطیوں کو صرف نظر کردیا جائے گا۔

ان لوگوں کے لیے جن کی مادری زبان بائیں سے دائیں جانب لکھی جاتی ہے، اردو سیکھنے میں ایک مشکل یہ ہوسکتی ہے کہ انہیں دائیں سے بائیں جانب لکھی جانے والی اردو پڑھنے کی عادت ڈالنی ہوگی۔

اردو تلفظ ہمیشہ تحریر سے مماثل نہیں ہوتا مثلاً لفظ "بالکل" کو "بلکل" پڑھا جاتا ہے اس لیے آپ کے لیے ایک مشورہ یہ ہے کہ آپ لفظوں کو ان کے اصل تلفظ کے ساتھ یاد کریں۔ اس لحاظ سے اردو بھی انگریزی زبان کی طرح ہے جس میں کئی الفاظ کا تلفظ ان کے ہجے سے مختلف ہوتا ہے۔

Open/close
مشکل الفاظ اور زبان کو بل دینے والے تلفظ :

 

اگر آپ زبان کو بل دینے والے ان جملوں کو دہرائیں تو یقیناً آپ کی زبان کہیں نہ کہیں ضرور لڑکھڑائے گی۔

سمجھ سمجھ کے سمجھ کو سمجھو
سمجھ سمجھنا بھی اک سمجھ ہے
سمجھ سمجھ کے بھی جو نہ سمجھے
میری سمجھ میں وہ ناسمجھ ہے

چنو کے چاچا نے
چنو کی چاچی کو
چاندنی رات میں
چاندی کی چمچ سے
چٹنی چٹائی

کچا پاپڑ پکا پاپڑ

Open/close
کیا آپ کو اردو کے کچھ اچھے لطیفے آتے ہیں؟s

 

ایک موٹا آدمی اپنے دبلے پتلے دوست سے کہتا ہے: ’’جب میں تمھیں دیکھتا ہوں تو لگتا ہے کہ دنیا میں قحط پڑگیا ہے۔،،
دبلا فوراً جواب دیتا ہے: ’’اور تمھیں دیکھ کر کوئی بھی آسانی سے یہ سمجھ سکتا ہے کہ یہ قحط کیوں پڑا ہے۔،،

بچہ باپ سے: ’’ابو لگتا ہے کہ آپ کا قد بڑھ رہا ہے۔،،
باپ: ’’تمھیں کیسے پتہ چلا؟،،
بچہ: ’’آپ کا سر بالوں سے باہر آرہا ہے۔،،

Open/close
اگر میں اردو سیکھوں تو کیا اس سے مجھے دوسری زبانیں سیکھنے میں مدد ملے گی؟

 

اردو سے قریب ترین زبان ہندی ہے۔ روز مرہ زندگی میں اردو اور ہندی بول چال بعض الفاظ کو چھوڑ کر تقریباً ایک جیسی ہی ہوتی ہے۔ اردو سیکھنے کے بعد آپ کے لیے ہندی بولنا اور سمجھنا بہت آسان ہوجائے گا لیکن ہندی تحریر پھر بھی آپ کے لیے ایک راز رہے گا کیونکہ وہ مختلف رسم الخط میں لکھی جاتی ہے۔

اردو جیسے رسم الخط میں جو دوسری زبانیں لکھی جاتی ہیں ان میں پشتو، کشمیری اور پنجابی شامل ہیں۔ اگرچہ پنجابی ایک اور رسم الخط گرمکھی میں بھی لکھی جاتی ہے۔ اردو رسم الخط نوّے فیصد فارسی اور عربی رسم الخط جیسا ہوتا ہے اس لیے اردو سیکھنے سے آپ کو عربی اور فارسی پڑھنے میں مدد ملے گی۔ اردو زبان کے تقریباً چالیس فیصد الفاظ عربی اور فارسی زبانوں سے ہی لیے گئے ہیں۔

Open/close
کیا نہیں کہا اور کیا جائے؟

 

اردو میں تین مصدر جو عام بول چال میں استعمال ہوتے ہیں سننے میں ایک دوسرے سے بہت مشابہ ہیں۔
کہنا
کھانا
کرنا

اردو زبان سیکھنے والے عام طور پر ان تینوں کو گڈمڈ کردیتے ہیں اس لیے ان کا خیال رکھنا ضروری ہے۔ انگریزی زبان میں کسی کو مخاطب کرنے کے لیے آپ "ہائی" یا "ہیلو" کہتے ہیں۔ بے تکلف اردو بول چال میں اس کے لیے "اوئے" کا لفظ ہے لیکن آپ یہ لفظ کسی اجنبی سے مخاطب ہونے کے لیے ہرگز استعمال نہ کریں کیونکہ یہ بہت ہی بے تکلف انداز ہوگا جس کا سامنے والا برا مان جائے گا۔

آپ کسی کو مخاطب کرنے کے لیے احترام والے الفاظ استعمال کرسکتے ہیں۔ مثلاً بھائی، دوست وغیرہ شائستگی کے ساتھ کسی کو مخاطب کرنے کے لیے آپ کئی الفاظ استعمال کرسکتے ہیں۔ مثلاً "سنئے"، "بھائی جان"، "جناب" اور خاتون کو مخاطب کرنے کے لیے آپ "بہن جی"، "باجی" اور بڑی عمر کی خواتین کو مخاطب کرنے کے لیے "بی بی" یا "اماں جی" کے الفاظ استعمال کرسکتے ہیں۔

Open/close
مشہور اقوال

 

ثبات ایک تغیر کو ہے زمانے میں (علامہ اقبال)
عدالت کی ناانصافیوں کی فہرست بڑی طولانی ہے، تاریخ آج تک اسکے ماتم سے فارغ نہ ہوسکی۔ (مولانا ابوالکلام آزاد)

Open/close
پہلی اشاعت

 

اردو میں پہلی مطبوعہ کتاب سب رس ہے جو 36-1635کے دوران ملا اسداللہ وجیہی نے لکھی تھی۔ سب رس ایک تمثیلی عارفانہ عشق کی داستان ہے جو فارسی زبان کے مصنف محمد یحیی ابن سیبک کی لکھی ہوئی مثنوی دستور عشاق اور حسن و دل سے ماخوذ ہے۔

سب رس کی نقول ہاتھ سے لکھی گئی تھیں کیونکہ اس وقت تک ہندوستان میں پرنٹنگ پریس نہیں پہنچا تھا۔ ہندوستان میں پرنٹنگ پریس پہلی بار پرتگالی فوج لائی تھی۔ پرنٹنگ پریس پر شائع ہونے والی اردو کی پہلی کتاب میر امن کی باغ و بہار تھی جو 1801 میں شائع ہوئی۔

Open/close
اردو بولتے وقت شائستگی اور احترام کا اظہار کیسے کیا جائے؟

 

اردو ایک شائستہ زبان ہے اور اس میں عزت و احترام کے اظہار کے لیے کئی الفاظ ہیں۔ اردو الفاظ میں شائستگی پر زور دینے کو ادب اور تکلف کہا جاتا ہے۔ عام طور پر ضعیف العمر اور سینئر افراد یا اجنبی لوگوں سے بات کرتے وقت ادب اور احترام کا خیال رکھا جاتا ہے۔

مثلاً انگریزی اسم ضمیر ‘یو’ کا اردو میں تین طرح سے ترجمہ ہوسکتا ہے۔ ‘تو’ جو کہ بہت ہی بے تکلف اور توہین آمیز لفظ ہے۔ ‘تم’ بھی بے تکلف اور قربت کو ظاہر کرتا ہے ‘آپ’ تکلف اور احترام کو ظاہر کرتا ہے۔

اسی طرح کسی سے درخواست یا التجا کے لیے احترام کے تین درجوں کے اظہار کی خاطر مختلف مصادر استعمال کیے جاسکتے ہیں۔ مثلاً جب آپ کسی سے چلے جانے کا کہیں تو اس کے لیے تین انداز موجود ہیں۔
جا: جو کہ بہت ہی بے تکلف اور توہین آمیز انداز ہے جاؤ: بے تکلف انداز ہے لیکن اس میں کسی حد تک احترام کا عنصر موجود ہے۔ جائیے: تکلف اور احترام کو ظاہر کرتا ہے۔

اردو بولنے والوں میں بعض چھوٹی چھوٹی چیزوں کو بھی بہت برا سمجھا جاتا ہے۔ خاص طور پر گھر کے اندر۔ مثلاً بزرگوں کے سامنے سگریٹ پینا، ٹانگ پر ٹانگ رکھ کر بیٹھنا، چیخ کر بولنا یا جب کوئی بڑا داخل ہو تو اسکے احترام میں کھڑا نہ ہونا اور اسے سلام نہ کرنا وغیرہ۔ اسی طرح کھانے کے دوران باتیں کرنا بھی بعض گھرانوں میں برا سمجھا جاتا ہے۔

AP Photo © Shakil Adil

Urdu key phrases

Get started with a few important phrases

Fotolia © YellowCrest Thomas, palmstone.com

The Urdu alphabet

Learn the 52 characters in the Urdu alphabet

BBC © 2014 The BBC is not responsible for the content of external sites. Read more.

This page is best viewed in an up-to-date web browser with style sheets (CSS) enabled. While you will be able to view the content of this page in your current browser, you will not be able to get the full visual experience. Please consider upgrading your browser software or enabling style sheets (CSS) if you are able to do so.